صفحہ اول / خبر کی خبر / کھال مافیا ۔۔۔۔۔۔  تحریر : حفیظ اللہ سعید

کھال مافیا ۔۔۔۔۔۔  تحریر : حفیظ اللہ سعید

عید قربان پہ جانوروں کے لین دین اور ٹرانسپورٹ کے بعد ایک بہت بڑا کاروبار کھالوں کی خریدو فروخت ہے۔ عید قربان کے موقع پہ چمڑے کی صنعت ایک بڑی مقدار میں چمڑا حاصل کرتی ہے۔ اس چمڑے سے بننے والا ایک جوتا پرس یا خالص چمڑے کی کوئی چیز برانڈز کے نام پہ ہزاروں روپے میں بکتی ہے۔ جبکہ ملک پاکستان میں دیکھنے کو یہ ملتا ہے کہ کھالوں کا ریٹ عید پہ انتہائی کم ہو جاتا ہے۔ امسال بھی دنبے کی کھال 20 روپے بکرے کی 50 اور بڑے جانور کی 450 تک بکنے کی خبریں مل رہی ہیں۔

یہ بھی مافیا کا کام ہے جیسے سبزی منڈی کی مافیا عید و رمضان میں سبزی فروٹ کے ریٹ آسمان پہ لے جاتی ہے ویسے ہی کھال مافیا بڑی عید پہ کھال کا ریٹ کوڑیوں کے بھاؤ پہ لے آتی ہے۔
ہم من حیث القوم مفاد پرست و مطلبی ہیں۔ اس کی ایک اور مثال دی جا سکتی ہے۔
دھوبی مافیا عید کے دنوں میں کپڑے استری کرنے کا ریٹ ڈبل سے بھی زیادہ کر دیتا ہے۔ ڈھٹائی بھی ملاحظہ کریں کہ یہ مافیا عیدی کے نام پہ یہ کرتا ہے
ہر طرف مافیاز و ابن الوقت لوگوں کا قبضہ ہے ہر شعبہ زندگی پہ جس کا جہاں جیسے اور جتنا داؤ لگتا ہے وہ اتنا ہی عوام کو لوٹنا اپنا پیدائشی حق سمجھتا ہے۔ ارباب اختیار سے گزارش ہے کہ عوام الناس کو ان لٹیروں سے بچانے کے لیے موثر اقدامات کریں۔

متعلقہ محمد نعیم شہزاد

.......................... محمد نعیم شہزاد ایک ادبی، علمی اور سماجی شخصیت ہیں۔ لاہور کے ایک معروف تعلیمی ادارہ میں انگریزی زبان و ادب کی تعلیم دیتے ہیں۔ اردو اور انگریزی دونوں زبانوں میں نظم اور نثر نگاری پر قادر ہیں۔ ان کی تحاریر فلسفہ خودی اور خود اعتمادی کو اجاگر کرتی ہیں اور حسرت و یاس کے موسم کو فرحت و امید افزاء بہاروں سے ہمکنار کرتی ہیں۔ دین اسلام اور وطن کی محبت ان کی روح میں بسی ہے۔ اسی جذبے کے تحت ملک و ملت کی تعمیر و ترقی میں پیش پیش رہتے ہیں۔

تجویز کردہ

عشرہ ذوالحجہ کی فضیلت واحکام ومسائل ۔۔۔ حافظ عبدالرحمٰن منہاس

اللہ تعالیٰ کا ارشاد ہے: وَالْفَجْرِ وَ لَیَالٍ عَشْرٍ یعنی مجھے فجر اور دس راتوں …

Send this to a friend

Hi, this may be interesting you: کھال مافیا ۔۔۔۔۔۔  تحریر : حفیظ اللہ سعید! This is the link: https://pakbloggersforum.org/khal-mafia/